۵ بهمن ۱۴۰۰ |۲۱ جمادی‌الثانی ۱۴۴۳ | Jan 25, 2022
ناظر عباس تقوی

حوزہ/ اسلامی تعلیمات کسی کو ناحق قتل کی اجازت نہیں دیتیں غیر ملکی فیکٹری مینجر کے قتل کا واقعہ اسلام اورپاکستان کو بدنام کرنے کی سازش ہے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،کراچی/شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مر کزی ایڈیشنل جنرل سیکر ٹری علامہ سید ناظر عباس تقوی نے کہا ہے کہ سیالکوٹ کا واقعہ مسلمانوں اور پاکستانیوں کے لئے باعث شرم ہے انتہا پسندوں نے پوری پاکستانی قوم کا سر شرم سے جھکا دیا ہے مذہب کا نام لینے والے انتہا پسندوں نے غیرانسانی اور ظالمانہ اقدام کر کے اسلام کو بد نام کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اسلامی تعلیمات کسی کو ناحق قتل کی اجازت نہیں دیتیں غیر ملکی فیکٹری مینجر کے قتل کا واقعہ اسلام اور پاکستان کو بدنام کرنے کی سازش ہے اسلام میں انتہا پسندی اور اور دہشت گردی کی کوئی گنجائش نہیں اسلام دوسرے مذاہب کابھی احترام کرتا اور رواداری کا درس دیتا ہے اسلام کسی ماورائے عدالت قتل کی اجازت نہیں دیتا۔

مزید کہا کہ اسلامی تعلیمات کے مطابق بغیر ثبوت اور صفائی کا موقع دیئے بغیر کسی کو سزا نہیں دی جاسکتی ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ مجرموں کو عبرتناک سزا دی جائے انتہا پسندی کے خاتمے کے لیے علماء میڈیا اور حکومت کو مل کررواداری کے فروغ کی مہم چلانی چاہیے اب اس انتہا پسندی کے خاتمے میں وقت لگے گالیکن اس کے لیے سنجیدہ اقدامات کرنے کی ضرورت ہے قانون پر عمل درآمد ہوتا تو ایسے اقدامات سامنے نہ آتے۔

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
1 + 11 =