۵ تیر ۱۴۰۱ |۲۶ ذیقعدهٔ ۱۴۴۳ | Jun 26, 2022
حسن نوریان

حوزہ/ کراچی میں تعینات ایرانی قونصلر نے پاکستان اور ایران کی خطے میں اہمیت اور ان کے درمیان مشترکہ ہمکاری کی ضرورت کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ ہم دونوں ممالک علاقے میں اپنی اہمیت کو سمجهتے ہوئے باہمی تعاون سے دہشتگردی کو شکست دے سکتے ہیں۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،کراچی میں ایرانی قونصلر حسن نوریان نے آج جمعہ کے دن اپنے ایک بیان میں کہاکہ ایرانی حکومت اور عوام خطے کی اقوام کے مشترکہ دشمنوں کی طرف سے کسی بھی قسم کی بدامنی، انتشار اور خوف پھیلانے والے دہشت گردی پر مشتمل اقدامات کی مذمت کرتے ہیں۔

انہوں نے کراچی میں حالیہ دہشت گردی کے واقعات کی شدید مذمت اور ان واقعات سے متأثرہ خاندانوں سے اظہار ہمدردی کرتے ہوئے کہاکہ ایران خود دہشت گردی کا شکار ہے اور انقلاب اسلامی کی کامیابی سے آج تک سترہ ہزار ایرانی باشندے دہشت گردوں اور ان کے آلہ کار اور حامیوں کے ہاتهوں اپنی جان گنوا بیٹهے ہیں۔ نوریان نے مزید کہاکہ ایرانی قوم دنیا میں سب سے زیاده دہشت گردی کا شکار ہے۔

کراچی میں تعینات ایرانی قونصلر نے پاکستان اور ایران کی خطے میں اہمیت اور ان کے درمیان مشترکہ ہمکاری کی ضرورت کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ ہم دونوں ممالک علاقے میں اپنی اہمیت کو سمجهتے ہوئے باہمی تعاون سے دہشتگردی کو شکست دے سکتے ہیں۔

قابل ذکر ہے؛ پاکستان میں اسلامی جمہوریہ ایران کے سفارتخانہ نے کراچی میں حالیہ دہشتگردی کے واقعات میں ایران کے ملوث ہونے کے الزام کی شدید تردید اور جھوٹی خبروں کی مذمت کرتے ہوئے کہاکہ تیسرا فریق غلط بیانی اور غلط اطلاع رسانی کرتے ہوئے ایران اور پاکستان کے برادرانہ تعلقات کو خراب کرنے کی کوشش کرنا چاہتی ہیں جس کی طرف ہمیں متوجہ رہنا چاہیئے۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
3 + 10 =