۶ اردیبهشت ۱۴۰۳ |۱۶ شوال ۱۴۴۵ | Apr 25, 2024
مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین گلگت

مرکزی سیکرٹری یوتھ ایم ڈبلیو ایم وومن ونگ محترمہ سائرہ ابراہیم نے کہا کہ گلگت کے حالات معاشرتی و ثقافتی تقاضوں اور تبدیلیوں کا مدنظر رکھتے ہوئے پنوجوان طبقے کے لیے کام کرنے کی ضرورت ہے اور اس سلسلے میں اسکولوں کالجوں کے ساتھ ساتھ محلے کی سطح پر دعائیہ پروگرام منعقد کروائے جائینگے جس میں تربیت اولاد کے حوالے سے ماوں کو بھی آگاہی دی جاے گی۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،ایم ڈبلیو ایم شعبہ خواتین گلگت کی یوتھ ونگ کمیٹی کا اہم اجلاس وحدت ہاوس گلگت میں ہوا۔ جسمیں نوجوانوں کی تربیت اور کیریئر گائیڈنس کے حوالے سے لائحہ عمل طے کیا گیا۔

مرکزی سیکرٹری یوتھ ایم ڈبلیو ایم وومن ونگ محترمہ سائرہ ابراہیم نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوۓ کہا گلگت کے حالات معاشرتی و ثقافتی تقاضوں اور تبدیلیوں کا مدنظر رکھتے ہوۓ نوجوان طبقے کے لیے کام کرنے کی ضرورت ہے اور اس سلسلے میں اسکولوں کالجوں کے ساتھ ساتھ محلے کی سطح پر دعائیہ پروگرام منعقد کروائے جائینگے جس میں تربیت اولاد کے حوالے سے ماوں کو بھی آگاہی دی جاے گی۔

اس موقع پر کمیٹی کی رکن محترمہ رباب رضوی نے بھی مفید آراء و تجاویز پیش کیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ہمیں اپنی نوجوان نسل کو صرف دینی تربیت تک محدود نہ رکھیں بلکہ انہیں معاشرے کے فعال ترین افراد میں شامل کرنا ہے اس سلسلے میں میڈیکل کی فرسٹ ایڈ تربیت کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے گرلز گائیدنگ کی ٹریننگ اور انھیں ذہنی و جسمانی طور پر آمادہ رکھنا اور ایک مضبوط اعصاب کی حامل شخصیت بنانا بھی ہمارے ایجندہ میں شامل ہوگا۔

اجلاس میں شعبہ جوان کے تحت تمام اراکین کو مختلف ٹاسک کے حصول کے لیے ٹیمیں تشکیل دے کر جلد  تربیتی امور پر کام کے آغاز کی ہدایات کی گئیں اجلاس میں محترمہ ثوبیہ بتول ، محترمہ شمسیہ ، محترمہ ناہیدہ اور معلمات مدرسہ باب العلم بھی شریک تھیں۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .