۵ بهمن ۱۴۰۰ |۲۱ جمادی‌الثانی ۱۴۴۳ | Jan 25, 2022
محترمہ سائرہ ابراہیم

حوزہ/ مرکزی رہنما مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کا کہنا تھا کہ گلگت بلتستان اسمبلی میں بیٹھے بڑے بڑے سیاستدان جو نفرت لسانیت فرقہ پرستی تعصب قومیت نسل پرستی کو فروغ دینا جانتے ہیں لیکن بدقسمتی سے وہ گلگت بلتستان کے مسائل سے غافل ہیں اور گلگت بلتستان کے مسائل کو حل کرنے کے لئے اقدامات نہیں کرتے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،مرکزی رہنما مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین محترمہ سائرہ ابراہیم نے گزشتہ روز گلگت کوہستان روڈ پر پیش آنے والے المناک حادثے پر افسوس اور دلی رنج کا اظہار کرتے ہوئے کہا کے کوئی بھی ذمہ دار شخص اس مسلے پر صوبائی حکومت سے بات کرنے کو تیار نہیں صوبائی حکومت اس مسلے کو سنجیدگی سے لے اور وفاق سے رابطہ کر کے ہنگامی بنیادوں پر شاہراہ قراقرام سے لے کے رائیکوٹ تک سڑک کے اطراف دیوار تعمیر کریں۔

انہوں نے کہا کے گلگت بلتستان اسمبلی میں بیٹھے بڑے بڑے سیاستدان جو نفرت لسانیت فرقہ پرستی تعصب قومیت نسل پرستی کو فروغ دینا جانتے ہیں لیکن بدقسمتی سے وہ گلگت بلتستان کے مسائل سے غافل ہیں اور گلگت بلتستان کے مسائل کو حل کرنے کے لئے اقدامات نہیں کرتے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت ہوش کے ناخن لے اور جس عوام کے ووٹ سے جیت کر آپ اسمبلی تک آتے ہیں ان کے مسائل کو مل بیٹھ کر حل کرنے کی کوشش کریں تاکے یہاں کے غریب عوام سکون کی زندگی گزار سکیں یہاں کی عوام بنیادی سہولیات سے بھی محروم ہے واحد راستہ ہے جو کے دوسرے شہروں سے رابطہ کا زریعہ ہے اور وہ عوام کے لئے حکومتی نااہلی کے سبب موت کا کنواں بن چکا ہے۔

سائرہ ابراہیم نے وزیراعلی صوبائی اسمبلی منتخب ممبران فورس کمانڈر ایف ڈبلیو او اور این ایچ کے اعلی ممبران سمیت ارباب اختیار سے اپیل کی ہے وہ جلد از جلد اس شاہراہ پر حفاظتی دیوار کا کام ہنگامی بنیادوں پر شروع کروائیں تاکے مستقبل میں کسی بڑے سانحے سے محفوظ رہ سکیں۔

انہوں نے کہا کے اس مشکل گھڑی میں گلگت بلتستان کی عوام ڈاکٹر اظہر کے غم میں برابر کی شریک ہے اللہ تعالی ڈاکٹر صاحب کے خانوادے کو جنت الفردوس میں اعلی مقام دے اور پسماندگان کو صبر و جمیل عطا کرے۔آمین

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
9 + 3 =