۸ تیر ۱۴۰۱ |۲۹ ذیقعدهٔ ۱۴۴۳ | Jun 29, 2022
علامہ راجہ ناصر

حوزہ/ مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل نے کہا کہ ثقافتی یلغار،غیر ملکی لٹریچر، یورپین لائف سٹائل اور ڈراموں کے ذریعے رشتوں کا تقدس غیر محسوس طریقے سے ختم کیا جارہا ہے۔حیا و پاکدامنی کی تنزلی ہمارے سماجی ڈھانچے کو تباہی کے دہانے کی طرف لے جا رہی ہے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، اسلام آباد/ مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے جماعت اہل حرم کے زیراہتمام "خاتون جنت کانفرنس" سے خطاب کرتے ممتاز عالم دین  مفتی گلزار نعیمی کو پروگرام کے انعقاد پر خراجِ تحسین پیش کیا۔

انہوں نے کہا کہ خاندان رسالت وہ عظیم اور بے مثال گھرانہ ہے جس کی اطاعت میں دنیا و آخرت کی سرخرو ہے ۔انسانیت کا معیار عقل ہے۔عقل طبعی میلان سے دوری اور رب کائنات کی قربت کے حصول پر زور دیتی ہے اور جو کوئی خدا کی رضا کا متمنی ہے اسے خاتون جنت حضرت فاطمہ سلام اللہ علیہا کو راضی رکھنا ہو گا۔یہ وہ ہستی ہیں جو خالق دوجہاں کی رضا کا منشا اور خیر کثیر ہیں۔خاتون جنت کی ذات مبارکہ زندگی کے تمام پہلوؤں میں ہمارے لیے رول ماڈل ہے۔

انہوں نے کہا کہ دور عصر میں یورپین  انداز معاشرت کے فروغ سے خاندان کے وجود کو تباہ کیا جا رہا ہے۔ ثقافتی یلغار،غیر ملکی لٹریچر، یورپین لائف سٹائل اور ڈراموں کے ذریعے رشتوں کا تقدس غیر محسوس طریقے سے ختم کیا جارہا ہے۔حیا و پاکدامنی کی تنزلی ہمارے سماجی ڈھانچے کو تباہی کے دہانے کی طرف لے جا رہی ہے۔خاندان کسی بھی معاشرے کی اکائی ہوتے ہیں۔جب خاندان کا وجود اپنی عفت و وقار کھونے لگتا ہے تو معاشرہ بے راہ روی کا شکار ہو جاتا ہے۔

مزید کہا کہ مضبوط اور باعظمت معاشرے کی تشکیل کے لیے ضروری ہے کہ خاتون جنت حضرت فاطمۃ الزہراء سلام اللہ علیہا کے اسوہ حسنہ کے مطابق اپنی طرز زندگی کو ڈھالا جائے ۔خاندان رسالت کی حقیقی اطاعت سے پاکدامنی، عفت، ایثار، طہارت، عشق خدا، بندگی اور قران سے اُنس حاصل ہو گا۔زندگی میں سکون اور ذہنی وجسمانی تناؤ سے آزادی کا واحد اور بہترین نسخہ محمد و آل محمد کی اطاعت ہے۔

کانفرنس میں مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل سید ناصر عباس شیرازی نےکہا کہ جناب سیدہ سلام اللہ علیہا حجت خدا ہیں جو عصمت کبریٰ کی منزل پر فائز ہیں۔وہ معصومہ و ہادیہ ہیں جن پر اللہ کا انعام ہوا۔ان کی پاکیزہ آغوش میں تاریخ بشریت کی ان عظیم ہستیوں نے پرورش پائی جنہوں نے استکباری قوتوں کے ناپاک ارادوں کو پاش پاش کر کے دین اسلام کو سربلند کیا۔ایک انقلابی ماں نے اپنی اولاد کو شجاعت، استقامت اور شرافت ورثے میں عطا کی۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
3 + 14 =