۱۴ تیر ۱۴۰۱ |۵ ذیحجهٔ ۱۴۴۳ | Jul 5, 2022
علامہ جواد نقوی

حوزہ/ تحریک بیداری امت مصطفیٰ کے سربراہ علامہ سید جواد نقوی نے کہا کہ امریکہ شیطان ہے، اس کی تمام چالیں بھی شیطانی ہیں، امریکہ افغانستان سے خود نہیں نکلا، بلکہ صرف فوجیں نکالی ہیں۔اس نے افغانوں کے مزاج کو سمجھا ہے، اب افغانیوں کو افغانوں کے ذریعے ہی تسخیر کرے گا۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،تحریکِ بیداریِ اُمتِ مصطفیٰ اور مجمع المدارس تعلیم الکتاب والحکمہ کے سربراہ علامہ سید جواد نقوی نے لاہور میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ شیطان ہے اور اس کی تمام چالیں بھی شیطانی ہیں، اس نے 20 سال افغانستان میں تجربے کیے ہیں، امریکی صدر نے بھی کہا ہے کہ وہ افغان محاذ پر کامیاب ہوئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ امریکہ اسامہ کی آڑ میں افغانستان میں داخل ہوا، ابھی بھی امریکہ افغانستان سے خود نہیں نکلا، بلکہ صرف فوجیں نکالی ہیں، امریکہ نے افغانوں کے مزاج کو سمجھا ہے، اب افغانیوں کو افغانوں کے ذریعے ہی تسخیر کرے گا۔

علامہ جواد نقوی کا کہنا تھا کہ امریکہ نے افغانستان میں بیٹھ کر روس اور چین کا مقابلہ کرنا ہے، اس محاذ آرائی کیلئے طالبان کو روس اور چین کیخلاف استعمال کیا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اب طالبان کا ’’سافٹ امیج‘‘ متعارف کروایا گیا ہے، طالبان پہلے محرم میں سیکڑوں اہل تشیع کو شہید کر دیتے تھے، لیکن اس بار انہوں نے نہ صرف اہل تشیع کو تحفظ دیا ہے، بلکہ مجالس بھی پڑھی ہیں اور مجالس میں شرکت بھی کی ہے۔

انہوں نے کہا کہ طالبان یہ سارے کام عالمی برادری کی توجہ حاصل کرنے کیلئے کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ بھی احتمال ہے کہ طالبان کو طالبان کیساتھ لڑا دیا جائے، اس خانہ جنگی کا اثر پاکستان پر بھی پڑے گا۔

انہوں نے کہا کہ افغان طالبان کو بیدار مغزی کا ثبوت دینا چاہیے، اور امریکی سازشوں سے آگاہ ہونا چاہیے تاکہ افغانستان میں امن قائم ہو سکے۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
2 + 3 =