۱۳ آذر ۱۴۰۱ |۱۰ جمادی‌الاول ۱۴۴۴ | Dec 4, 2022
علامہ رانا محمد ادریس

حوزہ/ جمعۃ المبارک کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے نائب ناظم اعلیٰ تحریک منہاج القرآن کا کہنا تھا کہ فرقہ وارانہ، لسانی و گروہی اختلافات کو ریاست مدینہ سے راہ نمائی لے کر ختم کرنا ہوگا، ریاست مدینہ کا آئین قانون کی حکمرانی سکھاتا ہے۔آج انسانیت جن مشکلات اور مسائل سے دو چار ہے، ان سے نجات کا واحد راستہ ریاست مدینہ کی ریاست سے ہو کر گزرتا ہے، ریاست مدینہ کا آئین انسانی تاریخ کا بہترین آئین ہے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،نائب ناظم اعلیٰ تحریک منہاج القرآن علامہ رانا محمد ادریس نے کہا ہے کہ 14 صدیاں بعد بھی ریاست مدینہ کا رول ماڈل ناقابل موازنہ ہے، آج انسانیت جن مشکلات اور مسائل سے دو چار ہے، ان سے نجات کا واحد راستہ ریاست مدینہ کی ریاست سے ہو کر گزرتا ہے، ریاست مدینہ کا آئین انسانی تاریخ کا بہترین آئین ہے۔

ریاست مدینہ کے آئین میں اتحاد اور مساوات سب سے نمایاں خصوصیات ہیں۔محسن انسانیت حضور نبی اکرم صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم نے مختلف مذاہب اور عقائد کے لوگوں کے درمیان ہم آہنگی کو پروان چڑھایا۔ اتحاد و مساوات کے ذریعے حقوق و فرائض کا ایک ایسا عظیم نظام وضع کیا جو معاشرے کے ہر فرد کو تحفظ اور تکریم فراہم کرتا ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جامع شیخ الاسلام ماڈل ٹاؤن میں جمعۃ المبارک کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

علامہ رانا محمد ادریس نے کہا کہ فرقہ وارانہ، لسانی و گروہی اختلافات کو ریاست مدینہ سے راہ نمائی لے کر ختم کرنا ہوگا۔ ریاست مدینہ کاآئین قانون کی حکمرانی سکھاتا ہے۔ حضور نبی اکرم (ص) نے قانون کی حکمرانی کے نظام پر سختی سے عمل کروایا۔ حضورؐ نے امیر اور غریب کے درمیان امتیاز کو ختم کیا۔

انہوں نے کہا کہ ہمیشہ قومیں ناانصافی کے باعث تباہ ہوتی ہیں۔ جو بھی اشرافیہ کے مفادات کا تحفظ اقربا پروری اور ان سے خصوصی سلوک کی حمایت کرتا ہے وہ قرآن و سنت کے رہنما اصولوں اور ریاست مدینہ کے بنیادی فلسفہ سے انحراف کرتا ہے۔ ریاست مدینہ کے آئین میں ہر شہری قانون کے سامنے برابر ہے اور اس کے ساتھ یکساں عزت و وقار کے ساتھ پیش آنا چاہیے۔

صدر منہاج القرآن انٹرنیشنل ڈاکٹر حسین محی الدین قادری نے نماز جمعہ جامع شیخ الاسلام میں ادا کی۔انہوں نے نماز جمعہ کے بعد نمازیوں اور کارکنان سے ملاقات بھی کی۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
2 + 2 =