۱۹ بهمن ۱۴۰۱ |۱۷ رجب ۱۴۴۴ | Feb 8, 2023
ایران

حوزہ/ دنیا کی سخت ترین اور غیر قانونی پابندیوں کا سامنا کرنے والے ایران نے ایک بار پھر فوجی سازوسامان کے میدان میں بڑی کامیابی حاصل کی ہے، اس بار ایران نے ملک کے عظیم جنگجو شہید قاسم سلیمانی کو خصوصی تحفہ پیش کیا ہے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، ایران کے فوجی انجینئرز نے بہت کم وقت میں وطن عزیز کے عظیم سپہ سالار شہید قاسم سلیمانی کو ایسا تحفہ دیا ہے کہ جس کے سامنے آتے ہی دشمنوں کے حواس باختہ اور انگلیاں دانتوں تلےدبی رہ گئیں۔ 'شہید قاسم سلیمانی' جنگی جہاز، جسے ایرانی انجینئرز نے بنایا تھا، پیر کو آئی آر جی سی کی بحری یونٹ میں شامل ہو گیا۔ ایران کے فوجی سربراہ میجر جنرل محمد باقری نے کہا کہ اس قسم کا جنگی جہاز ایران کا پہلا ہے جو مختصر اور درمیانے فاصلے تک مار کرنے والے میزائلوں کے لیے عمودی پروجیکشن سسٹم سے لیس ہے۔ جنرل باقری نے یہ بھی کہا کہ جنگی جہاز 20 اور 30 ڈی آر ڈی او ملی میٹر بندوقوں کے خودکار اور نیم خودکار فائرنگ کے نظام سے بھی لیس ہے جو قریبی اہداف کو نشانہ بنانے کے لیے استعمال کیے جا سکتے ہیں۔

اسلامی جمہوریہ ایران کی فوج کے سربراہ میجر جنرل باقری نے کہا کہ "یہ جنگی جہاز ملک کے اندر ایرانی یونیورسٹیوں سے پاس ہونے والے ماہرین اور سائنسدانوں نے بنایا ہے۔" اس لیے ہم کہہ سکتے ہیں کہ یہ ایک قومی کارنامہ ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ جہاز کی تعمیر سے لے کر منصوبہ بندی تک سب کچھ ایرانی ماہرین نے انجام دیا ہے۔

شہید قاسم سلیمانی جنگی جہاز میں دنیا کی جدید ترین ٹیکنالوجی استعمال کی گئی ہے۔ جنگی جہاز میں ہیلی کاپٹر کیریئر سسٹم بھی ہے۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ اسلامی انقلاب کے بعد سے ایران نے تمام شعبوں میں خود انحصاری کے حصول کی پالیسی اپنائی ہے اور اس پالیسی کے مطابق ملک نے دفاعی میدان میں بھی شاندار کامیابیاں حاصل کی ہیں۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
1 + 6 =