۶ خرداد ۱۴۰۳ |۱۸ ذیقعدهٔ ۱۴۴۵ | May 26, 2024
علامہ ساجد نقوی

حوزہ / قائد ملت جعفریہ پاکستان نے کہا: آج ہم تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے 45ویں یوم تاسیس کی 45ویں سالگرہ منا رہے ہیں تو ہمیں اپنی شاندار تاریخ اور ماضی پر فخر ہے۔ ان شاء اللہ آئندہ بھی ملک بھر میں آئین کی بالادستی، قانون کی حکمرانی، عادلانہ نظام کا قیام، اتحاو وحدت کا فروغ، تحفظ عزادری اور ملکی ترقی کیلئے ہمیشہ سرگرم عمل رہیں گے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کے مطابق، قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی نے تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے 45ویں یوم تاسیس کے موقع پر جاری اپنے بیان میں کہا: اگرچہ مخصوص حالات، اسلامائیزیشن کے رد عمل میں TNFJ وجود میں آئی لیکن مثبت سے مثبت ترسفر جاری رہا، آج مثبت سوچ، اتحاد و وحدت کا فروغ، اسلامی تہذیب کی تلقین، اچھے معاشرے اور اچھے نظام کی طرف رہنمائی جاری ہے۔

علامہ ساجدنقوی نے مزیدکہا: عوام کو منظم کرنے کی کوششیں ہوئیں۔ 13پریل سنہ 1979ء کو بھکر کی اسی آل پاکستان شیعہ کنونشن کے دوران مفتی جعفر حسین کو قائد ملت جعفریہ پاکستان منتخب کیا گیا۔

29 اگست 1983ء کو مفتی جعفر حسین کی وفات کے بعد 10 فروری سنہ 1984ء کو بھکر میں قومی قیادت کیلئے علامہ سید عارف حسین الحسینی کاانتخاب کیا گیا اور ان کی شہادت کے بعد 4 ستمبر سنہ 1988ء کو ہمیں سربراہ منتخب کئے جانے کا اعزاز حاصل ہوا۔

علامہ سید ساجد نقوی نے کہا: ملک میں TNFJ کا تنظیمی سفر جس کا باقاعدہ آغازعلامہ مفتی جعفر حسین سے ہوا، سے لیکر تاحال ملک میں بہت سے نشیب و فراز کا سامنا کرتے ہوئے مستقل مزاجی کے ساتھ بلا تفریق عوامی خدمت کا تسلسل اور عملی جدوجہد کا سفر جار ی ہے۔

آج ہم 45ویں سالگرہ منا رہے ہیں تو ہمیں اپنی شاندار تاریخ اور ماضی پر فخر ہے۔ ہمارے اسلاف نے اخلاص کے ساتھ سنگ ہائے میل تعمیر کیے ہیں جو روشنی کے مینار ہیں۔ ہم آنے والی نسلوں کے لیے ایک روشن مستقبل کے نقیب اوربشارت دہندہ ہیں۔

ہمارا پیغام ہے کہ اس کاررواں کو مزید فعالیت کے ساتھ آگے لے جایا جائے،ملت جس تاریخی فیز سے گزری ہے کارکن ہمیشہ اس کا ہراول دستہ کے طور پر میدان عمل میں موجود رہے ہیں، تنظیمی افراد کا نیٹ ورک ملک بھر میں موجود ہے ۔جن شخصیات ، علماء کرام و کارکنان نے اپنی ذمہ داریاں نبھائی ہیں وہ سب خراج تحسین کے مستحق ہیں۔

یاد رہے کہ 1992ء کو تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے نا م کو مختصر کر کے تحریک جعفریہ پاکستان رکھ دیا گیا تھا۔

اپنے پیغام کے آخر میں قائد ملت جعفریہ علامہ ساجد نقوی نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ اس جدوجہدو خدمت کے سلسلہ کو جاری رکھتے ہوئے ملک بھر میں آئین کی بالادستی ، قانون کی حکمرانی ، عادلانہ نظام کا قیام ،اتحاو وحدت کا فروغ، تحفظ عزادری اور ملکی ترقی کیلئے ہمیشہ سرگرم عمل رہیں گے، ان شاءاللہ۔

تبصرہ ارسال

You are replying to: .