۷ مرداد ۱۴۰۰ | Jul 29, 2021
پیر معصوم نقوی

حوزہ/ جمعیت علمائے پاکستان کے سربراہ قائد اہلسنت پیر معصوم نقوی کہا کہ امریکہ نے موسمیاتی تبدیلیوں پر کانفرنس میں نظر انداز کرکے ناکام خارجہ پالیسی کو بے نقاب کر دیا، عرب ممالک استعماری ممالک کی بلیک میل سے نجات کے لئے ایران سے تعلقات کو معمول پر لائیں۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، لاہور/ جمعیت علمائے پاکستان کی سربراہ قائد اہلسنت پیر معصوم نقوی نے چین اور ایران کے درمیان ایٹمی معاہدے کو دنیا میں طاقت کے توازن کیلئے قابل تحسین اقدام قرار دیا ہے۔

انہوں نے واضح کیا کہ پاکستان کو بھی امریکی غلامی سے نجات کے لئے اس معاہدے میں شامل ہونا چاہیے۔ امریکہ نے پاکستان کو موسمیاتی تبدیلیوں پر ہونیوالی کانفرنس میں نظر انداز کرکے پی ٹی آئی حکومت کی ناکام خارجہ پالیسی کو بے نقاب کر دیا ہے۔ پاکستان کو امریکہ کی بجائے چین ،روس، ترکی اور ایران سے اپنے تعلقات کو بہتر بنانے پر توجہ دینی چاہیے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جے یو پی سیکرٹریٹ کینال ویو لاہور میں ہونیوالے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں پیر مصطفی اشرف رضوی، ڈاکٹر امجد حسین چشتی، پیر اختر رسول، عقیل حیدر شاہ اور دیگر نے بھی شرکت کی۔

پیر معصوم نقوی نے کہا کہ ملکی مفاد اسی میں ہے کہ پاکستان امریکہ کی طرف جھکاو اور غلامی کی بجائے، آزاد خارجہ پالیسی اختیار کرے۔ انہوں نے کہا کہ ایران دنیا میں ابھرتی ہوئی عسکری طاقت ہے، جس نے امریکی دباو کو مسترد کرکے خود مختاری کی پالیسی اختیار کی۔ اس کا چین اور روس کیساتھ سفارتی تعلق پاکستان کے بھی مفاد میں ہوگا۔

پیر معصوم نقوی نے عرب ممالک کو مشورہ دیا ہے کہ وہ امریکہ اور اسرائیل کی کاسہ لیسی کی بجائے، ایران سے اپنے تعلقات کو معمول پر لائیں۔ انہیں استعماری ممالک کی بلیک میل سے نجات مل جائے گی۔ مضبوط ایران امریکہ کی موت اور عرب ممالک کی خوشحالی کا پیغام ہوگا۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
1 + 13 =