۲ اسفند ۱۴۰۲ |۱۱ شعبان ۱۴۴۵ | Feb 21, 2024
دعا کمیٹی کراچی کی جانب سے ہفتہ وار مرکزی اجتماعی دعائے توسل اور محفل میلاد

حوزہ / پاکستان کے شہر کراچی میں دعا کمیٹی صوبائی سکریٹریٹ مجلس وحدت مسلمین سندھ کے تحت بسلسلہ ولادت باسعادت حضرت امام علی رضا علیہ السّلام و بی بی معصومہ سلام اللہ علیہا محفل شاہ خراسان روڈ پر ہفتہ وار مرکزی اجتماعی دعائے توسل اور محفل میلاد اور دسترخوان امام رضا علیہ السلام کا انعقاد کیا گیا۔

حوزہ نیوز ایجنسی کے مطابق، پاکستان کے شہر کراچی میں دعا کمیٹی صوبائی سکریٹریٹ مجلس وحدت مسلمین سندھ کے تحت بسلسلہ ولادت باسعادت حضرت امام علی رضا علیہ السّلام و بی بی معصومہ سلام اللہ علیہا محفل شاہ خراسان روڈ پر ہفتہ وار مرکزی اجتماعی دعائے توسل اور محفل میلاد اور دسترخوان امام رضا علیہ السلام کا انعقاد کیا گیا۔

رپورٹ کے مطابق دعائے توسل کی تلاوت کی سعادت مولانا حیات عباس نجفی نے حاصل کی۔ جس میں ماتمی انجمنوں، سماجی، سیاسی، اسکاؤٹس کے نمائندوں کی کثیر تعداد اور مومنین و مومنات نے شرکت کی۔

محفل میں معروف شعرائے کرام، منقبت خواں حضرات نے نذرانۂ عقیدت پیش کیا۔ جن میں ناصر آغا ، ثاقب رضا ثاقب ، اریب ہادی ، علی رضا جعفری ، محمد رضا ، ظہیر رضوی ، رضی زیدی، محمد علی جلالوی ، عرفان رضوی، وقاص رضا ، شیراز زیدی ، نے بارگاہ امامت میں نذرانہ عقیدت پیش کیا، اس موقع پر مولانا مختار علی، ندیم حسین رضوی ، بوبی شاہ ، عظیم جاوا، ضامن عباس، جاوید حسین نقوی، مظہر شیرازی بھی شامل تھے۔

ایم ڈبلیو ایم کے رہنما مولانا حیات عباس نجفی ، علامہ سجاد شبیر رضوی ، مولانا مہدی ایمانی ناصر حسینی نے محفل میلاد سے خطاب کرتے ہوئے کہا: ہمیں سیرتِ امام علی رضا علیہ السّلام پر عمل پیرا ہو کر دنیا کی ظالم طاقتوں کے خلاف جدوجہد کرنی چاہیے۔

انہوں نے کہا: امام رضا علیہ السلام کی سیرت میں ہمیں ملتا ہے کہ حالات جس قدر بھی سنگین ہوں، اجتماعی ذمہ داریوں سے کسی صورت دستبردار نہیں ہونا چاہیے ۔ امام رضا علیہ السّلام اور بی بی معصومہ سلام اللہ علیہا کریم شخصیات ہیں ۔ ان سے توسل کرکے مسائل کے حل کے لئے دعا کرنی چاہیے۔

مقررین نے مشہور ترانہ "سلام فرماندہ" پر ممکنہ پابندی کی بازگشت کی شدید مذمت کی اور کہا: سلام فرماندہ میں ایسا کوئی مواد نہیں جس سے مذہبی منافرت یا فرقہ واریت ظاہر ہوتی ہو ۔ تاہم سلام فرماندہ پر پابندی کی کوششیں مذہبی منافرت کو ہوا دینے کی سازش ہوسکتی ہے ۔

مقررین نے مسنگ پرسنز کی بازیابی اور شاتم امام زمانہ (عجل)، باکسر کو کیفر کردار تک پہنچانے کا حکومت سے مطالبہ کیا۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .