۱۷ اردیبهشت ۱۴۰۰ | May 7, 2021
کراچی میں عظمت معصومین ؑ کانفرنس کا انعقاد، شیعہ سنی ہندو مسیحی رہنماؤں کی شرکت اور خطاب

حوزہ/ مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ احمد اقبال رضوی نے اپنے خطاب میں کہا کہ ہمیں معصومین کی سیرت پر عمل کرتے ہوئے وقت یزیدیوں کے خلاف عمل پیرا ہونا چاہئے ماہ شعبان رحمتوں وبرکتوں کا مہینہ ہے اس ماہ میں آئمہ معصومین کی ولادتوں کے سلسلہ ہیں خدا وند کریم اس ماہ کی برکت سے اپنے بندوں پر خصوصی لطف و کرم کرتا ہے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،کراچی/ صوبائی سیکریٹریٹ مجلس وحدت مسلمین پاکستان سندھ و دعا کمیٹی کراچی کے زیر اہتمام ہفتہ وار دعائے توسل اور عظیم الشان عظمت معصومین علیہ السّلام کانفرنس محفل شاہ خراسان روڈ پر منعقد ہوئی جس میں دعائے توسل کی تلاوت کی سعادت قاری فصیح الحسن شیراز نے حاصل کی بعد از ایک عظیم الشان عظمت معصومین علیہم السلام میں نظامت کے فرائض بردار ناصر الحسینی ، ابوطالب نے انجام دئیے جبکہ مہشور ومعروف علماء ، شعراء ، منقبت خواں ، سید ناصر آغا ، عزادار حسین ، آغا ذیشان ، اختر شیرازی ، عدنان جعفری ، اسد جعفری ، نقی لاہوتی  ، ظہیر جارچوی ، فصیح الحسن شیراز ، سلیم شمشاد ، حکیم فیض سلطان قادری ،علی رضا جعفری نے شرکت کی اور نذرانہ عقیدت پیش کیا۔

اس موقع پر مجلس وحدت مسلمین جنوبی پنجاب کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل اصغر تقی بھی کانفرنس میں موجود تھے۔ عظمت معصومین کانفرنس میں مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ احمد اقبال رضوی ، علامہ سجاد شبیر رضوی دعا کمیٹی کراچی کے رکن ، پروفیسر ڈاکٹر حکیم سید نصر عسکری ، علی حیدر شاہ ، قمر عباس رضوی دعا کمیٹی رکن ، سبطین نقوی ، اقلیتی برادری بشپ خادم بھٹو ، پنڈت میکش کمار ، گرومہاراج سنی اور سماجی شخصیات نے شرکت کی اور خطاب بھی کیا۔

اس موقع پر علامہ احمد اقبال رضوی نے اپنے خطاب میں کہا کہ ہمیں معصومین کی سیرت پر عمل کرتے ہوئے وقت یزیدیوں کے خلاف عمل پیرا ہونا چاہیے ماہ شعبان رحمتوں وبرکتوں کا مہینہ ہے اس ماہ میں آئمہ معصومین کی ولادتوں کے سلسلہ ہیں خدا وند کریم اس ماہ کی برکت سے اپنے بندوں پر خصوصی لطف و کرم کرتا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ گزشتہ کئی سالوں سے شیعہ مسنگ پرسن کے اہل خانہ اپنے پیاروں کی بازیابی کیلئے رائیں تک رہیں ہیں لیکن ان کا کچھ پتہ نہیں ریاست پاکستان اس۔معاملے میں آخر کیوں بے بس نظر آتی ہے اگر لاپتہ افراد کسی جرم میں ملوث ہیں تو انہیں عدالتوں میں پیش کیا جائے۔

انہوں نے وفاقی حکومت، چیف جسٹس آف پاکستان اور آرمی چیف سے مطالبہ کیا کہ وہ شیعہ لاپتہ افراد کو جلد از جلد بازیاب کرائیں ۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
4 + 2 =