۱۱ اسفند ۱۴۰۲ |۲۰ شعبان ۱۴۴۵ | Mar 1, 2024
علامہ شبیر میثمی

حوزہ/ سرگودھا میں نہج البلاغہ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ایس یو سی کے مرکزی سیکرٹری جنرل کا کہنا تھا کہ عزاداری سید الشہداء (ع) ہمارا آئینی و شہری حق ہے، جس سے کسی صورت دستبردار نہیں ہوسکتے، اسکے لئے چاہے جتنی قربانی دینی پڑے، دینے کیلئے تیار ہیں۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،جامعۃ الفرات سرگودھا کے زیرِ اہتمام "نہج البلاغہ کانفرنس" کا انعقاد کیا گیا، اس موقع پر مرکزی سیکرٹری جنرل شیعہ علماء کونسل پاکستان علامہ شبیر حسن میثمی نے اپنے صدارتی خطاب میں کہا کہ نہج البلاغہ میں امیرالمومنین علی علیہ السلام کے خطبات کی روشنی میں ہم سب پر آج کے دور میں ظالم و مظلوم کی شناخت رکھنا لازم ہے، وصیت مولا امیرالمومنین علی علیہ السلام پر عمل پیرا ہوکر ہر مظلوم کے حامی اور ہر ظالم کے مخالف بننا چاہیئے، ہمارے بے گناہ مظلوم شہداء نے جام شہادت نوش فرما کر ملت تشیع کو ابدی حیات بخشی، آج دشمن ہمارے مکتب کو نشانہ بنا رہا ہے، آج دشمن ہمیں نشانہ بنا کر ہماری مساجد و امام بارگاہوں میں دھماکے کرکے ہماری عزاداری کو محدود کرنے کی سازشوں میں مصروف ہے۔

انہوں نے کہا کہ میرے اور آپ کے قائد محترم علامہ سید ساجد علی نقوی کا فرمان ہے کہ عزاداری ہماری (تشیع) کی شناخت ہے، عزاداری سید الشہداء (ع) ہمارا آئینی و شہری حق ہے، جس سے کسی صورت دستبردار نہیں ہوسکتے، اس کے لئے چاہے جتنی قربانی دینی پڑے، دینے کیلئے تیار ہیں۔

اس موقع پر مرکزی سیکرٹری جنرل شیعہ علماء کونسل پاکستان علامہ شبیر حسن میثمی نے علامہ سید ساجد علی نقوی کی طرف سے قائد صحت کارڈ کے اجراء کا اعلان کیا، کانفرنس میں شرکت کنندگان کو موجودہ ملکی و قومی صورتحال سے آگاہ کیا اور تشیع کو درپيش مسائل کے حل کے حوالے سے گفتگو کی۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .