۲۳ تیر ۱۴۰۳ |۶ محرم ۱۴۴۶ | Jul 13, 2024
شیخ کاظم العمری

حوزہ/ سعودی حکام نے مدینہ منورہ کے معروف شیعہ عالم دین شیخ کاظم العمری کو ان کے دونوں بیٹوں سمیت دوسری بار گرفتار کرکے تشدد کا نشانہ بنا ڈالا ہے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،آل سعود کی سرکاری سرپرستی میں چلنے والی اس خونی مہم کا شکار سنی اور شیعہ دونوں رہے ہیں لیکن زیادہ تر شیعہ مسلک کے اکابرین اور عوام کو نشانہ بنایا جارہا ہے۔

خبر رساں ایجنسی "ISNA News" کی رپورٹ کے مطابق سعودی حکام نے مدینہ منورہ کے معروف شیعہ عالم دین شیخ کاظم العمری کو ان کے دونوں بیٹوں سمیت دوسری بار گرفتار کرکے تشدد کا نشانہ بنا ڈالا ہے۔

یاد رہے کہ شیخ کاظم العمری اور ان کے دونوں بیٹے پچھلے ایک سال سے سعودی رجیم کے عقوبت خانوں میں ذہنی اور جسمانی اذیتوں کا شکار رہے ہیں جن کا جرم یہ ہے کہ وہ مدینہ منورہ کے شیعیان حیدر کرار کی دینی قیادت کا فریضہ انجام دیتے ہوئے خالص مذہبی فعالیت میں مشغول تھے اور کسی قسم کی سیاسی سرگرمیاں نہیں رکھتے تھے لیکن اس کے باوجود انہیں گرفتار کرکے ذہنی اور جسمانی اذیتیں پہچائی جارہی ہیں۔

آل سعود رجیم کے مخالف مسلک کے اکابرین اور عام شہریوں کو شاہی عقوبت خانوں میں وحشتناک سزاوں کے ذریعے ماورائے عدالت قتل جیسے مجرمانہ ریکارڈ پر انسانی حقوق کے نام نہاد عالمی اداروں کی دانستہ خاموشی نے مغرب کے انسانی حقوق کے نعروں کی حقیقت کو برملا کردیا ہے۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .