۴ اردیبهشت ۱۴۰۳ |۱۴ شوال ۱۴۴۵ | Apr 23, 2024
وحدت امت ریلی

حوزہ/ عید میلاد النبی ﷺ کی پرُ برکت مناسبت سے حوزہ علمیہ جامعہ العروة الوثقیٰ سے والٹن فیروز پور روڈ تک ایک عظیم الشان وحدت امت ریلی کا انعقاد کیا گیا۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، عید میلاد النبی ﷺ کی پرُ برکت مناسبت سے حوزہ علمیہ جامعہ العروة الوثقیٰ سے والٹن فیروز پور روڈ تک ایک عظیم الشان وحدت امت ریلی کا انعقاد کیا گیا۔

وحدت امت قرآنی حکم؛ علمائے کرام مسلمانوں کی صفوں میں رخنہ ڈالنے والوں کا راستہ روکیں، علامہ سید جواد نقوی

تفصیلات کے مطابق، ریلی میں بِلا تفریقِ مسلک و مذہب ہزاروں افراد نے شرکت کی اور رسول اللہ ﷺ سے اپنے عشق و عقیدت کا اظہار کیا۔

وحدت امت قرآنی حکم؛ علمائے کرام مسلمانوں کی صفوں میں رخنہ ڈالنے والوں کا راستہ روکیں، علامہ سید جواد نقوی

شرکائے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے سربراہ تحریکِ بیداری امتِ مصطفیؐ اور زعیم جامعہ عروۃ الوثقیٰ علامہ سید جواد نقوی نے کہا کہ پیغمبر اعظم صلی اللّٰہ علیہ وآلہ وسلّم کی ولادت ان برکتوں کا نقطئہ آغاز ہے جو اللہ نے بشریت کے لئے مقدر فرمائی ہیں۔ آپ ﷺ نے عرب کی جاہل قوم کو تبلیغ اور تربیت کے ذریعے خیرِ امت میں بدل دیا اور ان کی باہمی دشمنیوں کو اخوت و محبت میں ڈھال دیا۔ ریوڑ کو امت بنانا ایک عظیم معجزہ ہے جو تعلیم و تربیت سے ممکن ہوا ،اب یہ امت کا فریضہ ہے کہ رسول اللہ ﷺ کے مشن کو تکمیل تک پہنچائے اور اس مقصد کے لئے خود کو قوم، قبیلہ، مسلک و گروہ کی حالت سے نکال کر امت کے قالب میں ڈھالے، کیونکہ امت ہی قرآنِ مجید کی واحد قابلِ قبول اجتماعی حالت ہے۔

وحدت امت قرآنی حکم؛ علمائے کرام مسلمانوں کی صفوں میں رخنہ ڈالنے والوں کا راستہ روکیں، علامہ سید جواد نقوی

انہوں نے مزید کہا کہ مؤمنین کی خوبیوں میں سے ایک خوبی یہ ہے کہ وہ آپس میں ایک دوسرے پر رحم کرتے ہیں اور دشمنوں پر شدید سخت ہوتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ آج کا مسلمان بدقسمتی سے اپنے ہی مسلمان بھائی کو دشمن سمجھ کر اس پر سخت گیر اور مسلمانوں کے دشمنوں پر مہربان بنا ہوا ہے، جس کی وجہ ناقص دشمن شناسی اور تنگ نظری ہے۔

مزید تصاویر دیکھیں: جامعہ عروۃ الوثقی کے تحت وحدت امت ریلی کا انعقاد

علامہ سید جواد نقوی نے بیداریِ امت کو راہ حل کے طور پر پیش کیا اور کہا کہ اس ہلاکت خیز فتنے میں بصیرت، تدبر و تفکر اور گہرا تجزیہ ضروری ہے، تاکہ اختلاف و تفرقے اور دشمنان اسلام کی عیاری ومکاری سے بچتے ہوئے مسلمانوں کی صفوں میں رخنہ ڈالنے کی کوششیں ناکام بنائی جاسکیں۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .

تبصرے

  • علی محمد US 15:59 - 2023/09/29
    0 0
    ماشاءاللہ