۱ اردیبهشت ۱۴۰۳ |۱۱ شوال ۱۴۴۵ | Apr 20, 2024
سیدعبدالفتاح نواب

حوزہ/ ایرانی ادارۂ برائے حج و زیارت میں رہبرِ انقلابِ اسلامی کے نمائندے نے اسلام فوبیا کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج اسلام فوبیا کے پیچھے امریکہ اور غاصب صہیونی حکومت سرگرم ہیں۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، حجت الاسلام والمسلمین سید عبدالفتاح نواب صفوی نے مکہ مکرمہ میں اسلام فوبیا کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مغربی ممالک میں اسلام فوبیا اور مسلمانوں کی حکیمانہ منطق سے مخالفت کوئی نئی بات نہیں ہے۔

انہوں نے اسلام فوبیا کی گزشتہ تاریخ کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ مکہ مکرمہ میں، رسول اللہ صلی اللّٰہ علیہ وآلہ وسلّم کی بعثت سے ہی آغاز ہوا اور آنحضرت صلی اللّٰہ علیہ وآلہ وسلّم اور آپ کے باوفا اصحاب کو مکہ میں اذیتیں دی گئیں اور بدر، احد، خندق اور خیبر جیسی عظیم جنگوں کا سامنا کرنا پڑا اور اسلام کے پھیلنے کے ساتھ ساتھ، اسلام دشمنی میں اضافہ ہوتا گیا اور آج مغربی ممالک اور غاصب صہیونی حکومت اسلام فوبیا میں مصروف عمل ہیں۔

حجت الاسلام والمسلمین سید نواب نے مزید کہا کہ 11 ستمبر کے واقعے کو بہانہ بنا کر مغربی ممالک نے مسلمانوں سمیت مسلمانوں کے مقدسات جیسے قرآن اور مساجد پر متعدد حملے کئے ہیں اور آج بھی جاری ہے۔

ایرانی حجاج کرام کے سرپرست اعلیٰ نے مزید کہا کہ اسلام فوبیا کے تعلق سے امام خمینی رحمۃ اللّٰہ علیہ نے مسلمان جوانوں کو مخاطب کرتے ہوئے فرمایا کہ دشمنان اسلام روز اول سے ہی یہ چاہتے تھے کہ رسول اللہ صلی اللّٰہ علیہ وآلہ وسلّم جزیرۃ العرب میں اسلام کو فروغ دینے میں کامیاب نہ ہو سکے، کیونکہ وہ اسلام کو اپنے مفادات کے خلاف دیکھتے تھے اور وہ سمجھ گئے تھے کہ اگر پیغمبرِ اسلام غالب آ جائیں تو ان کے ظلم و جبر میں رکاوٹ بنیں گے، لہٰذا پوری طرح سے اسلام دشمنی میں مصروف عمل ہو گئے لیکن الحمدللہ دشمنان اسلام، اسلام کو ختم کرنے میں کامیاب نہیں ہوئے اور آج اسلام شان و شوکت کے ساتھ پھیل رہا ہے۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .