۱۷ اردیبهشت ۱۴۰۰ | May 7, 2021
علامہ راجہ ناصر عباس جعفری

حوزہ/ جن قوموں نے میڈیا کی اہمیت و افادیت کا درک کر لیا ہے اور اس کا بہترین استعمال جانتی ہیں وہی مختلف محاذوں پر اپنا بہترین دفاع کر سکتی ہیں۔جدید ٹیکنالوجی کے موجودہ دور میں نت نئی تکنیکوں سے آگہی ہم پر واجب ہے تاکہ دشمن کا کوئی حربہ ہم پر کارگر نہ ہو۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، اسلام آباد/ مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے ایم ڈبلیو ایم کی تین روزہ میڈیا ورکشاپس کی آخری نشست سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ میڈیا موجودہ دور کا طاقتور ترین ہتھیار ہے۔جن قوموں نے میڈیا کی اہمیت و افادیت کا درک کر لیا ہے اور اس کا بہترین استعمال جانتی ہیں وہی مختلف محاذوں پر اپنا بہترین دفاع کر سکتی ہیں۔جدید ٹیکنالوجی کے موجودہ دور میں نت نئی تکنیکوں سے آگہی ہم پر واجب ہے تاکہ دشمن کا کوئی حربہ ہم پر کارگر نہ ہو۔ ففتھ جنریشن وار کسی تہذیبی تصادم کا نام بلکہ میڈیا کے ذریعے گمراہ کُن پروپیگنڈہ سے ایک ہی اسلامی تہذیب سے وابستہ افراد کو ایک دوسرے کا جانی دشمن بنانے کی مذموم کوشش کا نام ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ سامراجی طاقتیں بھائی کو بھائی سے لڑانے کے شیطانی منصوبے پر عمل پیرا ہیں جس کی تکمیل کے لیے وہ میڈیا کو بطور ہتھیار استعمال کر رہی ہیں۔سوشل میڈیا، پرنٹ میڈیا اور الیکٹرانک میڈیا میں ہمارے نوجوانوں کی مہارت انہیں ملک وقوم کا بہترین مدافع ثابت کر سکتی ہے۔دین ہمیں وقت کے تقاضوں کے مطابق علم حاصل کرنے کا درس دیتا ہے۔انہوں نے کہا کہ میڈیا سے آگہی کے ساتھ ساتھ دین شناسی بھی ضروری ہے تاکہ اس کا مثبت استعمال کیا جا سکے۔

انہوں نے میڈیا ورکشاپس کے بہترین انعقاد پر ایم ڈبلیو ایم کے شعبہ اطلاعات و نشریات کو خراج تحسین پیش کیا۔ورکشاپس میں،صوبہ پنجاب، خیبرپختونخوا، گلگت بلتستان اور آزادکشمیر کے مختلف اضلاع سے مجلس وحدت مسلمین کے میڈیا سیکریٹریز شریک ہوئے جن سے ملک کے نامور صحافیوں، اینکرز، کالم نگاروں سمیت ذرائع ابلاغ کی نامور شخصیات نے خطاب کیا اور میڈیا کی اہمیت و افادیت پر روشنی ڈالی۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .
4 + 0 =