۲۳ تیر ۱۴۰۳ |۶ محرم ۱۴۴۶ | Jul 13, 2024
کرگل یوم قدس 2

حوزہ/ کرگل ضلع میں عالمی یوم القدس کے موقع پر بڑے پیمانے پر ریلیاں نکالی گئی جن میں ہزاروں کی تعداد میں فرزندان توحید شرکت کی۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، بانی انقلاب اسلامی حضرت امام خمینی (رح) کا رمضان المبارک کے آخری جمعہ کو یوم القدس کے نام سے موسوم کرنے کا مقصد امت مسلمہ کے نزدیک مسئلہ فلسطین کو زندہ کرنا اورامت اسلامیہ کو متحرک کرنا ہے، اسی مناسبت سے جمعۃ الوداع کو عالم اسلام کے ساتھ ساتھ کرگل ضلع میں عالمی یوم القدس کے موقع پر بڑے پیمانے پر ریلیاں نکالی گئی جن میں ہزاروں کی تعداد میں فرزندان توحید شرکت کی۔

یہ جلوس ضلع ہیڈ کوارٹر پر سب بڑا ریلی امام خمینی میموریل ٹرسٹ کرگل اور انجمن جمعیت العلمااثناعشریہ کے زیر اہتمام برآمد کیاگیا، یہ ریلی اثناعشریہ چوک سے برآمد ہوکر مین بازار سے ہوتے ہوئے مسجد حنفیہ چوک سے گزرتے ہوئے بلتی بازار سے واپس اثناعشریہ چوک پر اختتام پذیر ہوئی، جلوس میں شامل مظاہرین امریکہ ،اسرائیل اور برطانیہ کے خلاف نعرے لگارہے تھے اور اسی طرح غزہ کے مظلوم عوام کے حمایت میں بھی نعرے لگارہے تھے،اثناعشریہ چوک پر علمائے کرام نے طوفان الاقصیٰ اور اسلامی نقطہ نظر سے یوم القدس کے اہمیت پر روشنی ڈالی ۔

ادھر امام خمینی میموریل ٹرسٹ کے بینر تلے عالمی یوم القدس کے موقع پر جامع مسجد کرگل سے علمائے کرام کے قیادت میں ریلی برآمد کی گئی، ریلی کے آگے آگے مطہری پبلک اسکول کے طلبا ایک مخصوص انداز اپنے ہاتھوں میں غزہ کے معصوم شہداکے علامتی جنازے بھی اٹھارکھے تھے،جلوس میں شامل مظاہرین اپنے ہاتھوں میں غزہ کے معصوم شہیدوں کے فوٹو اور اورپلے کارڈز اٹھارکھے تھے جن پر فلسطین کے مظلوم عوام کے حمایت اور اسرائیل وامریکہ کے خلاف الفاظ درج تھے۔

اس دوران ریلی میں شامل لوگ امریکہ مردہ باد،اسرائیل مردہ باد ،برطانیہ مردہ باد ،غزہ کے مظلوموں ہم تمہارے ساتھ ہیں جیسے نعرے لگارہے تھے،جلوس میں شامل میں لوگ بیت المقدس کے ماڈل بھی اٹھارکھے تھے، جلوس مرکزی بازار سے گذرتے ہوئے خمینی چوک سے حسینی پارک میں داخل ہوا جہاں علمائے کرام نے عالمی یوم القدس کی اہمیت اور اس سال طوفان الاقصٰی اور طوفان الاحرار کی تناظر میں یوم القدس کی خصوصیت اوراہمیت پر روشنی ڈالی ۔

مقریرین نے 7 اکتوبر سے جاری اسرائیلی حملوں کے نتیجے ہزاروں کی تعداد میں بے گناہ فلسطنیوں کو خاک وخون میں غلطاں کرنے کو لیکر اسرائیل اوراستکباری طاقتوں کی اسرایل کی پشت پناہی پر شدید لفظوں میں مذمت کی،اورساتھ ہی فلسطینی مجاہدین کے استقامت اور شجاعت کو سراہا۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .