۲۴ تیر ۱۴۰۳ |۷ محرم ۱۴۴۶ | Jul 14, 2024
غزہ

حوزہ/ خوراک سے متعلق اقوام متحدہ کے خصوصی نمائندے "میشل فخری" نے کہا کہ اسرائیل پر اقتصادی اور سیاسی پابندیاں عائد کیے جانے کی ضرورت ہے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، خوراک و غذا کے امور میں اقوام متحدہ کے خصوصی رپورٹر "مائیکل فخری" نے کہا کہ اسرائیل پر اقتصادی اور سیاسی پابندیاں عائد کیے جانے کی ضرورت ہے۔

خوراک و غذا کے امور میں اقوام متحدہ کے خصوصی رپورٹر "مائیکل فخری" نے کہا کہ اسرائیل پر اقتصادی اور سیاسی پابندیاں عائد کیے جانے کی ضرورت ہے۔

میشل فخری نے الجزیرہ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ غزہ میں موجودہ بھکمری تاریخ کی سب سے بڑی بھکمری ہے۔

انہوں نے واضح کیا کہ اسرائیل نے اکتوبر میں غزہ کو بھوک سے مارنے کی مہم شروع کی تھی اور آج ہم دیکھ رہے ہیں کہ اس علاقے کے بچے بھوک سے جان دے رہے ہیں۔

اقوام متحدہ کے خصوصی نمائندے نے کہا کہ "بین الاقوامی ماہرین غزہ میں موجودہ واقعات کو نسل کشی سمجھتے ہیں۔"

فخری نے یہ بات زور دے کر کہی کہ اب ہمیں غزہ کے لیے جس چیز کی ضرورت ہے وہ یہ ہے کہ حکومتوں پر دباؤ ڈالا جائے کہ وہ انسانی تنظیموں کو کام کرنے کی اجازت دیں۔

اقوام متحدہ کے رپورٹر نے کہا کہ فلسطینی بچوں کو اپنے مصائب و آلام کے خاتمے کے لیے عالمی برادری کی حمایت کی ضرورت ہے۔

تبصرہ ارسال

You are replying to: .