۵ خرداد ۱۴۰۳ |۱۷ ذیقعدهٔ ۱۴۴۵ | May 25, 2024
قدس

حوزہ/ امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کراچی ڈویژن میڈیا سیل نے اعلان کیا ہے کہ گذشتہ سالوں کی طرح اس سال بھی حضرت امام خمینیؒ کے فرمان پر 23 رمضان المبارک جمعۃ الوداع کو عالمی یوم القدس منایا جائے گا۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، ڈویژن صدر آئی ایس او دیباج عابدی نے کہا: حضرت امام خمینیؒ کے فرمان پر 23 رمضان المبارک جمعۃ الوداع کو عالمی یوم القدس منایا جائے گا۔

یوم القدس کے سلسلہ میں منعقدہ کراچی پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہا: امام خمینیؒ کے فرمان پر لبیک کہتے ہوئے 23 رمضان المبارک جمعہ الوداع کو عالمی یوم القدس منایا جائے گا جبکہ پاکستان کی مرکزی ریلی نمائش تا تبت سینٹر 3 بجے سہ پہر تحریک آزادی القدس پاکستان کے تحت نکالی جائے گی۔

اس موقع پر ملک بھر میں مظلوم فلسطینیوں اور کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیلئے مظاہرے اور ریلیوں کا انعقاد کیا جائے گا۔

حکومت پاکستان یوم القدس کو سرکاری سطح پر منانے کا اعلان کرے، مظلومین فلسطین آج فتح کے نزدیک تر ہیں اور اسرائیل بربادی کے دہانے پر ہے، مجالس وجلوس ہائے یوم علی (ع) میں بھی یزید وقت امریکہ و اسرائیل کیخلاف بھرپور صدائے احتجاج بلند کی جائے گی۔

فلسطینی مقاومتی فورسز نے ثابت کردیا کہ مزاحمت میں عزت،وقار اور کامیابی ہے۔ فلسطینوں کی فتح ملت اسلامیہ کی فتح ہے،آج اگر مسئلہ فلسطین زندہ ہے تو اس کے پیچھے امام خمینیؒ، رہبر معظم آیت اللہ سید علی خامنہ ای اور شہید سردار قاسم سلیمانی کا بنیادی کردار ہے، انشاء اللہ وہ دن دور نہیں جب مسلمان قبلہ اول کو غاصب صیہونی ریاست سے آزاد دیکھیں گے۔

پاکستان میں دہشت گردی کے خطرات کے باعث جلوس ہائے یوم علی(ع) اور یوم القدس کی ریلیوں کو فول پروف سیکورٹی فراہم کرنا ریاست کی ذمہ داری ہے۔

موجودہ حالات کے پیش نظر حکومتی انتظامیہ یوم علی(ع) اور یوم القدس کی ریلی کے روٹ پر سیکورٹی سمیت دیگر اقدامات کا آغاز کرے، بصورت دیگر حکومت کی غفلت کے خلاف احتجاج کریں گے۔

ان خیالات کا اظہار امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کراچی ڈویژن کے صدر دیباج عابدی، شیعہ علماء کونسل کے مرکزی ایڈیشنل سیکریٹری جنرل علامہ ناظر عباس تقوی، مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی رہنماء مولانا باقر زیدی، امت واحدہ کے رہنما علامہ امین شہیدی، بزرگ عالم دین علامہ مرزا یوسف حسین اور جعفریہ الائنس کے رہنماء شبر رضا، مرکزی تنظیم عزا ایڈہاک کمیٹی کے رہنماء شمس الحسن شمسی سمیت دیگر رہنماؤں نے کراچی پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

اپنے خطاب میں مقررین کا کہنا تھا کہ مسئلہ فلسطین 1979ءسے قبل ختم ہوچکا تھا، عرب ممالک کی شکست در شکست کھانے کے بعد اسرائیل فلسطین پر قبضہ جمانے میں کامیاب ہوچکا تھا،مگر انقلابِ اسلامی ایران اور امام خمینی (رح) کی کوششوں سے یہ مسئلہ پھر دنیا کے سامنے اجاگر ہوا۔

حضرت امام خمینی نے جمعتہ الوداع کو عالمی یوم القدس قرار دیا، فلسطینی مجاہدین کی ہر طرح سے مدد کی اور فلسطین کے مسئلہ کو ایک عالمی تحریک بنایا، امام خمینی (رح) جانتے تھے کہ اسرائیل کو محض فلسطین تک محدود رہنے کیلئے مسلط نہیں کیا گیا ہے بلکہ اسرائیل عالم اسلام پر قبضہ چاہتا ہے، اسی لئے امام خمینی (رح) نے شروع سے ہی اسرائیل کے خلاف جدوجہد شروع کی اور آج دنیا میں بسنے والا ہر مظلوم فلسطین کی آزادی کیلئے سینہ سپر ہے۔

مقررین نے کہا کہ قدس امت مسلمہ کا قلب ہے اور اسرائیل اس پر خنجر کی مانند ہے،دنیا بھر کے مسلمانوں پر واجب ہے کہ قبلہ اول کے تقدس و تحفظ اور مظلوم فلسطینیوں کی حمایت میں صدائے احتجاج بلند کریں ان شاء اللہ وہ دن دور نہیں جب اسرائیل کا ناپاک وجود صفحہ ہستی سے مٹ جائے گا۔

مقررین نے مزید کہا کہ مسلمان حکمران اگر غیرت و حمیت کا مظاہرہ کرتے ہوئے اپنے قبلہ اول پر چڑھائی کرنے والوں سے جرات مندانہ انداز اختیار کرتے تو آج فلسطین کا نقشہ مختلف ہوتا۔اپنی بقا کے لیے فلسطین کے مسلمانوں نے ایک طویل اور صبر آزما جنگ لڑی ہے۔ جن مسلمان حکمرانوں نے اپنے اسلامی نظریات پر اسرائیل و امریکہ کی تابعداری کو مقدم رکھا ہے تاریخ ان کی اس سیاہ کاری کو کبھی معاف نہیں کرے گی۔

دنیا بھر کے باشعور و با ضمیر افراد یوم القدس کے موقع پر مظلوموں کی حمایت اور ظالمین سے اپنی نفرت کا برملا اظہار کرتے ہیں۔

اس موقع پر آئی ایس او کراچی ڈویژن کے صدر دیباج عابدی کا کہنا تھا کہ 21 رمضان المبارک کو یوم علی علیہ السلام کے مرکزی جلوس کے دوران نماز جماعت کا اہتمام ایم اے جناح روڈ بندو خان ہوٹل کے سامنے 2 بجے کیا جائے گا جبکہ نماز کے اختتام پر امریکہ و اسرائیل مخالف احتجاج بھی کیا جائے گا۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

You are replying to: .